امریکہ کی ایک اور سازش بے نقاب

لبنان کی مزاحمتی تنظیم حزب اللہ کے سیکرٹری جنرل سید حسن نصراللہ نے کہا ہے کہ جولائی دو ہزار چھے کی جنگ نے دشمن کو ذلیل و خوار اور رسوا کر دیا۔  انہوں نے کہا کہ وادی الحجیر کی جنگ نے دشمن کے تمام فوجی منصوبوں کو ناکام بنا دیا اور ان کے پاس پسپائی اختیار کرنے کے علاوہ اور کوئی راستہ باقی نہیں بچا تھا۔ سید حسن نصراللہ نے کہا کہ دشمن کو جولائی دو ہزار چھے کی جنگ میں کامیابی اور فتح کی ضرورت تھی، وہ اس کامیابی اور فتح سے حزب اللہ پر اپنی شرائط تھوپنا چاہتا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ انیس سو تہتر کے بعد سب سے بڑی ہیلی بورن کارروائی وادی الحجیر میں جولائی دو ہزار چھے کی جنگ میں انجام پائی، اس جنگ میں دشمن کے درجنوں مرکاوا ٹینک تباہ کر دیئے گئے، صیہونی فوج کی اسپیشل فورس کے دسیوں افسروں اور فوجیوں کو ہلاک اور زخمی کر دیا گیا۔اسرائیلیوں نے یہاں جہنم کا احساس کیا۔

حزب اللہ کے سربراہ کا کہنا تھا کہ قتل اور تباہی و بربادی، جیسی کہ آج یمن میں ہو رہی ہے، قوموں کی شکست کا باعث نہیں بن سکتی، جولائی دو ہزار چھے کی جنگ نے دنیا کی بہت سی فوجی پالیسیوں اور حکمت عملیوں کو بدل کر رکھ دیا۔ سید حسن نصراللہ نے کہا کہ لبنان کی سرزمین کا چپہ چپہ دشمن کے لئے ایک گڑھا بن جائے گا، جس میں دشمن کے ٹینک تباہ اور اس کے فوجی مارے جائیں گے۔ اسرائیل کے پاس لبنان میں کوئی کامیاب اسٹریٹجی نہیں ہوگی۔ دشمن کی زمینی حملے کی اسٹریٹیجی کے مقابل ہماری اسٹریٹیجی وادی الحجیر کی اسٹریٹیجی ہوگی۔ ان کا کہنا تھا کہ امریکہ نہیں چاہتا کہ داعش اس وقت شام میں ہدف اور نشانہ بنے کیونکہ وہ اس گروہ کو شام کو تقسیم کرنے کے لئے استعمال کرنا چاہتا ہے۔ انہوں نے داعش گروہ سے مقابلے کے لئے مسلح شامی مخالفین کی توانائی کے بارے میں بھی شکوک و شبہات کا اظہار کیا۔ حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصراللہ نے کہا ہے کہ جولائی دو ہزار چھے کی جنگ نے دشمن کو ذلیل و خوار اور رسوا کر دیا۔

About وائس آف مسلم

Voice of Muslim is committed to provide news of all sort in muslim world.

ایک تبصرہ

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

Read Next

ăn dặm kiểu NhậtResponsive WordPress Themenhà cấp 4 nông thônthời trang trẻ emgiày cao gótshop giày nữdownload wordpress pluginsmẫu biệt thự đẹpepichouseáo sơ mi nữhouse beautiful