بدعنوانی کا الزام، امیر مقام کے بیٹے کو 30 مئی تک جیل بھیج دیا گیا

 پشاور کی اینٹی کرپشن عدالت نے ایف آئی اے کی جسمانی ریمانڈ کی استدعا مسترد کرتے ہوئے امیر مقام کے بیٹے اشتیاق امیر کو 30 مئی تک جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔ شانگلہ الپوری روڈ تعمیر کرپشن کیس کی اینٹی کرپشن عدالت میں سماعت ہوئی، ایف آئی اے نے کیس میں گرفتار امیر مقام کے بیٹے اشتیاق احمد کو عدالت میں پیش کیا۔ ایف آئی اے کی جانب سے 11 روزہ جمسانی ریمانڈ کی استدعا کی گئی۔ ایف آئی اے وکیل کا کہنا تھا کہ بشام الپوری پراجیکٹ کی لاگت 850 سے 2800 ملین تک پہنچی۔ اشتیاق احمد کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ اشتیاق کو سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے، جو ریکارڈ ایف آئی اے نے پیش کیا ہے وہ اشتیاق نے خود انہیں دیا، اشتیاق کیخلاف وفاقی وزیر مراد سعید مہم چلا رہے ہیں، مراد سعید نے نیب سمیت دیگر اداروں کو انکوائری کیلئے خطوط لکھے۔ عدالت نے ایف آئی اے کی استدعا مسترد کرتے ہوئے اشتیاق کو جیل بھیج دیا۔

About یاور عباس

یاور عباس صحافت کا طالب علم ہے آپ وائس آف مسلم منجمنٹ کا حصہ ہیں آپ کا تعلق گلگت بلتستان سے ہے اور جی بی کے مقامی اخبارات کے لئے کالم بھی لکھتے ہیں وہاں کے صورتحال پر گہری نظر رکھتے ہیں۔

ایک تبصرہ

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.