نواز شریف پر حملہ ملزمان کا انفرادی فعل ہے، جامعہ نعیمیہ کا ان سے کوئی تعلق نہیں، راغب نعیمی

لاهور: ناظم جامعہ نعیمیہ ڈاکٹر راغب حسین نعیمی نے لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عقیدہ ختم نبوت کی حفاظت ہم سب کی ذمہ داری ہے اور اس ذمہ داری سے کسی طور عہدہ براء نہیں ہوں گے، عقیدہ ختم نبوت کےدفاع کی ذمہ داری ارکان پارلیمنٹ کی بھی ہے، وہ بھی اپنا کردار ادا کریں۔ ڈاکٹر راغب نعیمی نے کہا کہ جامعہ نعیمیہ میں پیش آنیوالا واقعہ افسوسناک ہے، اختلاف رائے کا حق سب کو ہے لیکن ایسے اقدامات قابل مذمت ہیں۔ راغب نعیمی نے کہا کہ نواز شریف اور اُن کی فیملی سے ہمارے تعلقات 70 سال سے زائد عرصے پر محیط ہیں، اگر کوئی یہ سمجھتا ہے ایسے ہتھکنڈوں سے ہمارے تعلقات خراب کر لے گا تو یہ ان کی بھول ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں دکھ ہے ہمارے مہمان کیساتھ ایسا سلوک کیا گیا۔

ڈاکٹر راغب حسین نعیمی نے سکیورٹی اداروں سے کہا کہ جو بھی ملزمان ہیں، یہ ان کا انفرادی عمل ہے، جامعہ نعیمیہ کا اس واقعہ سے کوئی تعلق نہیں، سکیورٹی ادارے ملزمان سے مکمل تفتیش کریں اور اس بات کا پتہ چلایا جائے کہ ان ملزمان کے پیچھے ماسٹر مائنڈ کون ہے۔ ایک سوال کے جواب میں ڈاکٹر راغب حسین نعیمی نے کہا کہ جامعہ نعیمیہ کے علماء میں کوئی اختلافات نہیں، تمام علماء اور طلباء متفق تھے کہ تقریب میں میاں نواز شریف کو ہی دعوت دی جائے، اس لئے اختلافات کی خبریں بے بنیاد ہیں۔ یہ سوال کہ ملزمان جامعہ نعیمیہ کے طلباء تھے کے جواب میں راغب نعیمی کا کہنا تھا کہ جامعہ نعیمیہ کے طلباء ہیں یا نہیں، یہ کہنا قبل از وقت ہوگا، جامعہ میں سینکڑوں طلباء زیرتعلیم ہیں، اس لئے ابھی کچھ نہیں کہہ سکتے۔ انہوں نے کہا کہ عرس کی یہ تقریبات حسب معمول اپنے شیڈول کے مطابق جاری رہیں گی اور جامعہ نعیمیہ میں ہونیوالا کانووکیشن بھی آج ہی منعقد کیا جائے گا۔

About وائس آف مسلم

Voice of Muslim is committed to provide news of all sort in muslim world.

ایک تبصرہ

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

Read Next

ăn dặm kiểu NhậtResponsive WordPress Themenhà cấp 4 nông thônthời trang trẻ emgiày cao gótshop giày nữdownload wordpress pluginsmẫu biệt thự đẹpepichouseáo sơ mi nữhouse beautiful