پاکستان دشمن عناصر کی سازش

آغا علی رضوی کی زیر صدارت گلگت میں آل پارٹیز کانفرنس کا انعقاد، 11 نکاتی اعلامیہ جاری

مجلس وحدت مسلمین بلتستان کے سیکریٹری جنرل اور عوامی ایکشن کمیٹی گلگت بلتستان کے قائم مقام چیئرمین آغا علی رضوی کی سربراہی میں، گلگت کے ایک مقامی ہوٹل میں ایک اہم آل پاٹیز کانفرنس کا انعقاد ہوا، جس میں گلگت بلتستان کی تمام سیاسی، سماجی اور مذہبی جماعتوں کے رہنماؤں نے شرکت کی۔

زرائع کے مطابق کانفرنس میں عوامی ایکشن کمیٹی کے رہنماوں کی گرفتاری اور ان پر عائد غداری کے مقدمات پر شدید تحفظات کا اظہار کیا گیا۔ گلگت بلتستان میں سرگرم عمل سیاسی و مذہبی جماعتوں، ٹریڈ ایسوسی ایشنز، بار ایسوسی ایشن کے نمائندوں پر مشتمل آل پارٹیز کانفرنس میں گلگت بلتستان کے مسائل اور موجودہ سیاسی صورت حال پر مشترکہ اعلامیہ پیش کیا گیا۔

1۔ آل پارٹیز کانفرنس کے اعلامیے میں کہا گیا کہ گلگت بلتستان میں کام کرنے والی تمام جماعتوں کا یہ نمائندہ اجتماع صوبائی حکومت اور انتظامیہ کی جانب سے، پرامن جمہوری و سیاسی جدوجہد کے ذریعے عوامی مسائل/مطالبات کو اجاگر کرنے کی پاداش میں، عوامی ایکشن کمیٹی کے رہنماؤں پر غداری اور دہشت گردی کے دفعات لگا کر پابند سلاسل کرنے کے عمل کی مذمت کرتا ہے، اور مطالبہ کرتا ہے کہ صوبائی حکومت پرامن سیاسی جدوجہد کرنے والے سیاسی رہنماؤں اور کارکنان کو بلاجواز ہراساں کر کے عوامی مسائل کو اجاگر کرنے کی جدوجہد سے دور رکھنے، نیز سیاسی مخالفین کو جبر و تشدد کے ذریعے خاموش کرانے کی کوششوں سے باز آجائے، اور ان رہنماؤں اور کارکنان کے خلاف درج مقدمات تین دن کے اندر اندر واپس لے۔

2۔ جمہوری انداز میں اپوزیشن کے مطالبات اور عوامی مسائل کے حل کیلئے بات چیت کا راستہ اپنایا جائے۔ تشدد اور جبر کا راستہ جمہوری رویوں کے خلاف ہے لہذٰا یہ اجتماع صوبائی حکومت سے جمہوری رویہ اپنانے کا مطالبہ کرتا ہے اور عوامی نمائندوں کو دیوار سے لگانے کی روش ترک کی جائے۔

3۔ یہ نمائندہ اجلاس حکومت پاکستان سے مطالبہ کرتا ہے کہ پاک چائنہ اقتصادی راہداری میں گلگت بلتستان کو پاکستان کے دیگر صوبوں سے بڑھ کر حصہ دیا جائے کیونکہ گلگت بلتستان کی سرزمین سے گزر کر اقتصادی راہداری منصوبہ پاکستان تک پہنچتا ہے۔ گلگت بلتستان میں توانائی کے بڑے منصوبوں (بونجی پاور پراجیکٹ اور بھاشا دیامر ڈیم ) کو جلد از جلد مکمل کیا جائے، گلگت بلتستان کے حدود میں تین اقتصادی زونز قائم کئے جائیں اور تمام اضلاع کی مین رابطہ سڑکوں کو توسیع دیکر ازسرنو تعمیر کیا جائے، نیز بیروزگار نوجوانوں کو روزگار کے مواقع فراہم کئے جائیں۔

4۔ عوامی ایکشن کمیٹی کا چارٹر آف ڈیمانڈ، گلگت بلتستان کے عوام کی آواز ہے اور اس عوامی آواز کو جبر و تشدد سے دبانے کی بجائے، یہاں کے عوام کے ان جائز مطالبات کو تسلیم کر کے سات دہائیوں سے محروم علاقے کے عوام کی محرومیت کا ازالہ کیا جائے۔

5۔ یہ نمائندہ اجلاس پاک فوج کا ضرب عضب کے ذریعے پاکستان سے دہشت گردی کے خاتمے کی کوششوں اور پاک چائنہ اقتصادی راہداری منصوبے کی کامیابی کیلئے اقدامات کی مکمل حمایت کرتا ہے اور گلگت بلتستان کی تمام دینی و سیاسی جماعتیں پاک فوج کی کوششوں میں تعاون کی یقین دہانی کراتا ہے۔

6۔ گلگت بلتستان کے غیور عوام نے ڈوگرہ راج کی غلامی سے اس خطے کو آزاد کروایا اور اس آزاد خطے کو بلا مشروط پاکستان کی سرحدات کو چائنہ سے منسلک کر دیا۔ گلگت بلتستان کے عوام کا پاکستان پر یہ ایک ایسا احسان ہے جس کا بدلہ مشکل ہے۔ لہٰذاگلگت بلتستان کی موجودہ حیثیت کے تناظر میں پورے خطے کو ٹیکس فری زون قرار دیا جائے۔

7۔ گلگت بلتستان کی متنازعہ حیثیت کے تناظر میں یہاں کے قدرتی وسائل سے استفادے کا حق صرف اور صرف گلگت بلتستان کے عوام کو حاصل ہے، لہٰذا ان قدرتی وسائل کی بندر بانٹ کا سلسلہ روک دیا جائے اور گلگت بلتستان قانون ساز اسمبلی کو منرل پالیسی بنانے کا اختیار منتقل کیا جائے تاکہ اس خطے کے مفادات کے مطابق منرل پالیسی مرتب کی جاسکے۔

8۔ گلگت بلتستان بے شمار گلیشرز، پہاڑ اور جنگلات پر مشتمل ہے، جہاں قابل کاشت زرعی اراضی نہ ہونے کے برابر ہے اور مستقبل میں بڑھتی ہوئی آبادی کے پیش نظر گھر بنانے کیلئے بھی زمین تنگ پڑنے کا اندیشہ ہے، لہذٰا سی پیک کی زد میں آنیوالی تمام اراضی کا متعلقہ آبادی کے عوام کو معاوضہ ادا کیا جائے، نیز خالصہ سرکار کی آڑ میں زبردستی زمین چھیننے سے گریز کی جائے تاکہ علاقے کا امن تہہ و بالا نہ ہو۔

9۔ CPEC کے تحت جنریٹ ریونیو (Generate Revenue) میں سے 50 فی صد حصہ گلگت بلتستان کیلئے مختص کیا جائے۔

10۔ CPEC کے حوالے سے ٹھوس موقف اپناتے ہوئے اسے آئین ساز اسمبلی سے مشروط کرنے کا مطالبہ کیا جاتا ہے جو کہ معاہدہ میں شامل ہو اور تمام معاملات طے کر کے آئینی ضمانت فراہم کی جائے تاکہ سی پیک قانونی اور آئینی ہو متنازعہ نہ ہو۔

11۔ مودی کے بیان کی پرزور مذمت کرتے ہیں۔ پاکستان دشمن عناصر سے اظہار بیزاری کرتے ہیں، اور عوام کے حقوق کیلئے آواز بلند کرنے والے عوامی لیڈروں پر غداری کے الزام لگا کر انہیں پابند سلاسل کرنے کو پاکستان دشمن عناصر کی سازش سمجھتے ہیں۔

About وائس آف مسلم

Voice of Muslim is committed to provide news of all sort in muslim world.

ایک تبصرہ

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

*

Read Next

ăn dặm kiểu NhậtResponsive WordPress Themenhà cấp 4 nông thônthời trang trẻ emgiày cao gótshop giày nữdownload wordpress pluginsmẫu biệt thự đẹpepichouseáo sơ mi nữhouse beautiful