ہم نے گلگت بلتستان کو ریفارمز آرڑرکے ذریعے ہی چلانا ہے۔چیف جسٹس

گلگت بلتستان کے آٸینی حقوق کے حوالے سے کیس کی اھم سماعت چیف جسٹس کی سر براہی میں لارجر بنچ نے کی کیس کی سماعت کے موقع پر اٹارنی جرنل آف پاکستان نے کہا کہ راۓ شماری تک گلگت بلتستان کو دوسرے صوبوں کے برابر لانے کیلۓ تمام بنیادی حقوق دیۓ جارہے ہے آرٹیکل 6 سے 29 تک کے تمام بنیادی حقوق بھی دیے جارہے انہوں نے کہا کہ جوڈیشل، سول سروس ریفارمز، لوکل گورنمٹ کا قیام، ایگزیکٹیو اور بنیادی حقوق کی فراہمی یقینی بنایا جاۓ گا۔ اس موقع پر صوباٸ وزیر قانون اورنگزیب ایڈوکیٹ نے کہا کہ GB اسمبلی نے سرتاج عزیز کمیٹی کی سفارشات کو پارلیمنٹ کے ذریعے آینی ترامیم کے زریعے پاس کرنے کی استدعا کی ہےاور Provincial list کے حوالے سے تحفظات سے بھی آگاہ کیا لیکن چیف جسٹس نے کہا کہ ایسا ممکن نہی ہے عدالت کے معاون خصوصی اعتزاز احسن نے کہا کہ آرٹیکل 1 کو چھیڑے بغیر اور مسلہ کشمیر کو متاثر کیے بغیر پارلیمنٹ کے ذریعے آٸینی ترامیم کرکے عبوری صوبہ بنایا جاسکتا ہے جی بی بار کے وکیل سلمان اکرم راجا نے بھی پارلمینٹ کے ذریعے آٸینی ترامیم کی استدعا کہ لیکن چیف جسٹس نے کہا کہ ہم نے گلگت بلتستان کو بنیادی حقوق، جوڑیشل ریفارم اور معاشی طور سے مستحکم کرنے کیلۓ ریفارمز آرڑر2018 ہی دینا ہے اس موقع پر جی بی کے لایرز ، سیاستدان اور سوشل ایکٹیوسٹ بہت مایوس ہوکر باہر نکلے ۔۔

 

About وائس آف مسلم

Voice of Muslim is committed to provide news of all sort in muslim world.

ایک تبصرہ

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.